4000 پولیس اہلکار کاواساکی میں استغاثہ کے دفتر سے بھاگ نکلے ریپ کے مشتبہ کی تلاش میں

کاواساکی: بدھ کو جاپان میں ایک بڑے پیمانے پر تلاشی کی کاروائی جاری تھی جس میں 4000 پولیس افسران، 850 گاڑیاں، سونگھنے والے کتے، ہیلی کاپٹر اور کشتیاں کاواساکی میں ایک مفرور ریپ کے مشتبہ کی تلاش میں مصروف تھے۔

20 سالہ یوتا سوگیموتو سے ان دعوؤں کی وجہ سے پوچھ گچھ کی جا رہی تھی کہ وہ ایک گینگ کا حصہ تھا جس نے 2 جنوری کو کاواساکی کی سڑکوں پر ایک عورت سے زیادتی کی اور اسے لُوٹا۔

پولیس کے مطابق، سوگیموتو یوکوہاما ضلعی استغاثہ کے دفتر کی عمارت کی چھٹی منزل پر اپنے وکیل سے مشورہ کر رہا تھا۔ اس نے چوتھی منزل پر ریسٹ روم استعمال کرنے کے لیے کہا۔ ایک پولیس افسر نے اس کی ہتھکڑی اتاری تاہم روک سوگیموتو کی کمر کے ساتھ ہی بندھی رہنے دی۔ چند ہی لمحات بعد جب انچارج افسر اس کو دیکھ نہیں رہا تھا، سوگیموتو اپنی رسیوں سے پھسل کر نکلا اور عمارت سے فرار ہو گیا۔

بدھ کو پولیس نے کہا سوگیموتو کے کپڑے ایک قریبی مکان کے باغ میں دریافت ہوئے۔

سانکےئی شمبن اخبار نے کہا، جب الارم بج اٹھے تو علاقے میں پولیس نے ایک بڑے پیمانے کا آپریشن شروع کر دیا، گلیاں ہزاروں افسروں اور بڑی تعداد میں ساز و سامان سے بھر گئیں۔

آپ کومنٹ میں اپنی رائے دے سکتے ہیں ۔