کاشیوا میں خنجر بردار حملوں پر 24 سالہ شخص زیرِ حراست

ٹوکیو: کاشیوا، صوبہ چیبا میں پولیس نے بدھ کی رات ایک 24 سالہ بے روزگار شخص کو خنجر بردار حملے کے الزام میں حراست میں لے لیا۔ اس حملے میں 10 منٹ کے اندر ایک گلی میں ایک آدمی ہلاک اور تین دیگر زخمی ہو گئے تھے۔

جاپانی میڈیا نے پولیس کے حوالے سے بتایا کہ مشتبہ سئےجو تاکےئی نے الزامات کا اعتراف کیا ہے اور کہا کہ اسے بس روپے کی ضرورت تھی۔

این ایچ کے کے مطابق، پولیس نے کہا کہ تاکےئی کے اپارٹمنٹ سے ایک خون آلود خنجر ملا۔

تاکےئی نے منگل کو کئی ذرائع ابلاغ کو بتایا تھا کہ وہ مہلک خنجر زنی کا عینی شاہد ہے۔

اس حملے کا پہلا نشانہ ایک سائیکل سوار شخص تھا جسے گھاؤ لگا۔ 31 سالہ ایکےما دوسرا شکار تھا جو جان سے گیا۔ تیسرے واقعے میں حملہ آور نے ایک اور شخص کے ہاتھ پر چرکا لگایا۔ چوتھے واقعے میں ایک کار ڈرائیور پر حملہ کیا گیا۔ مشتبہ نے چوتھے شخص کی کار چرا لی۔ یہ کار تین گھنٹے بعد قریباً 1.5 کلومیٹر دور ایک سہولتی اسٹور کے پارکنگ ایریا میں کھڑی پائی گئی۔

پولیس نے کہا کہ نگران کیمرے میں ڈرائیور کار سے نکل کر پرے جاتا ہوا دکھائی دیا تھا۔ اور وہ فوٹیج میں اسے تاکےئی کے طور پر شناخت کرنے میں کامیاب رہے۔

آپ کومنٹ میں اپنی رائے دے سکتے ہیں ۔