پولیس این فرینک کی ڈائری مجروح کرنے پر آدمی سے پوچھ گچھ میں مصروف

ٹوکیو: پولیس نے جمعرات کو کہا کہ وہ ایک بے روزگار شخص سے پوچھ گچھ کر رہے ہیں۔ شبہ ہے کہ اس نے ٹوکیو کے دو وارڈز کی آٹھ لائبریریوں اور کئی کتابوں کی دوکانوں پر این فرینک کی “ایک نوجوان لڑکی کی ڈائری” نامی کتاب اور دیگر متعلقہ کتب کی 300 نقول کو مجروح کیا۔

یہ آدمی 30 کے پیٹے میں ہے اور اسے پچھلے جمعے کو حراست میں لیا گیا۔ فُوجی ٹی وی نے پولیس کے حوالے سے بتایا کہ اسٹور کے نگران کیمرے سے پتا چلا کہ وہ جونکودو بک اسٹور، مینامی ایکےبوکورو، ٹوکیو میں غیر قانونی طور پر داخل ہو رہا تھا۔ یہ 22 فروری کا دن تھا اور اس سے ایک دن قبل اسی اسٹور میں مذکورہ ڈائری کی نقول مجروح کی گئی تھیں۔

پولیس نے کہا کہ آدمی اسٹور میں پوسٹر لگانے کی کوشش کر رہا تھا۔

فوجی ٹی وی نے خبر دی کہ پولیس کے مطابق، مشتبہ نے مبہم انداز میں ان کتابوں کو مجروح کرنے کا اعتراف کیا ہے۔ تاہم اس کی گفتگو بیشتر اوقات ناقابلِ فہم رہی۔

این فرینک کی “ایک نوجوان لڑکی کی ڈائری” کو 2009 میں اقوامِ متحدہ کے ادارہ برائے تعلیم، سائنس و ثقافت کے ‘دنیا کی یادگار’ نامی رجسٹر میں شامل کیا گیا تھا۔

آپ کومنٹ میں اپنی رائے دے سکتے ہیں ۔